Istikhara Ki Dua| استخارہ کرنے کا طریقہ

“استخارہ” کا مطلب ہے خیر طلب کرنا۔ جب کسی شخص کو آنے والے کسی معاملے کے اچھے یا برے اثرات کا اندازہ نہ ہو اور وہ تردد کر رہے ہوں کہ کام کریں یا نہ کریں، تو ایسے موقع پر ان کو چاہئے کہ اللہ تعالی سے اس معاملے میں خیر طلب کریں، اسے “استخارہ” کہا جاتا ہے۔ اس کا طریقہ و ترغیب خود حضور اکرم صلی اللہ علیہ و سلم نے بیان کیا تھا۔ ایک صحابی، حضرت جابر رضی اللہ عنہ، فرماتے ہیں کہ حضور اکرم صلی اللہ علیہ و سلم ہمیں اپنے تمام اہم معاملات میں استخارہ کی تعلیم دیتے تھے، اسی طرح جیسے قرآن کی کوئی سورت سکھاتے تھے۔ آپ صلی اللہ علیہ و سلم فرماتے تھے:

“جب تم میں کسی کام کی اہمیت کا سامنا کرو تو دو رکعت نفل نماز پڑھ کر اس دعا کو مانگو

Istikhara Ki Dua| استخارہ کرنے کا طریقہ

اَللّٰهُمَّ إِنِّيْ أَسْتَخِیْرُكَ بِعِلْمِكَ، وَ أَسْتَقْدِرُكَ بِقُدْرَتِكَ، وَ أَسْأَلُكَ مِنْ فَضْلِكَ الْعَظِیْمِ، فَإِنَّكَ تَقْدِرُ وَ لَا أَقْدِرُ، وَ تَعْلَمُ وَ لَا أَعْلَمُ، وَ أَنْتَ عَلَّامُ الْغُیُوْبِ اَللّٰهُمَّ إِنْ كُنْتَ تَعْلَمُ أَنَّ هٰذَا الْأَمْرَ خَیْرٌ لِّيْ فِيْ دِیْنِيْ وَ مَعَاشِيْ وَ عَاقِبَةِ أَمْرِيْ وَ عَاجِلِهِ وَ اٰجِلِهِ، فَاقْدِرْهُ لِيْ، وَ یَسِّرْهُ لِيْ، ثُمَّ بَارِكْ لِيْ فِیْهِ وَ إِنْ كُنْتَ تَعْلَمُ أَنَّ هٰذَا الْأَمْرَ شَرٌ لِّيْ فِيْ دِیْنِيْ وَ مَعَاشِيْ وَ عَاقِبَةِ أَمْرِيْ وَ عَاجِلِهِ وَ اٰجِلِهِ، فَاصْرِفْهُ عَنِّيْ وَ اصْرِفْنِيْ عَنْهُ، وَ اقْدِرْ لِيَ الْخَیْرَ حَیْثُ كَانَ ثُمَّ أَرْضِنِيْ بِهِ.

اس کے بعد اپنی حاجت اللہ کے حضور رکھیں۔”

اگرپہلی دفعہ دل میں اطمینان حاصل نہ ہو تو سات دن تک یہ عمل دہرائیں، ان شاء اللہ خیر ہوگی۔

استخارہ کے لئے کوئی خاص وقت مخصوص نہیں ہے، البتہ بہتر ہوتا ہے کہ رات کو سونے سے پہلے جب ماحول سکون میں ہو تو استخارہ کریں۔ فتاویٰ شامی میں بعض مشائخ کے حوالے سے منقول ہے کہ دعاءِ استخارہ پڑھ کر ذکر کرتے ہوئے پاکی کی حالت میں دائیں کروٹ پر سجیں، اگر خواب میں سفید یا سبز رنگ کو دیکھیں تو اس کو نیک اشارہ سمجھیں اور اگر سرخ یا سیاہ رنگ دیکھیں تو اس کام کو نہ کریں۔ تاہم خواب آنا ضروری نہیں ہے، دل کا میلان جس طرف ہو، وہ کام کریں۔ یہی استخارہ کا مشروع طریقہ ہے، اس کے علاوہ عوام میں استخارہ کے دوسرے طریقے شرعاً مستند نہیں ہیں۔ احادیث کے مطابق، جو شخص استخارہ کرنا چاہتا ہو، وہ خود کرے۔

Spread the love